Ad Code

Responsive Advertisement

How dubai crown prince spends his billions

 How dubai crown prince his billions 


شیخ خاندان کے پاس اتنا پیسہ ہے کہ اگر 200 لوگ یہ 

پیسہ 
کرنے کے لیے بیٹھے ہیں تو ان کو ایک سال لگ جائے اس 

پوسٹ میں  ایک بار پھر سے خوش آمدید ناظرین دبئی کے 

شاہی خاندان کے آگے چھوٹے موٹے ٹی وی اسٹار کسی مزدور

 سے کم نہیں ہے اس کی صرف ایک وجہ ہے اور وہ پیسہ نہ

 یہ جاننے جانے کی کے لیے کے شاہی خاندان کے پاس کتنا 

پیسہ ہے ہر وقت پانی کی طرح پیسہ بنانے کے باوجود بھی 

آخر اس خاندان کے پاس پیسہ ختم کیوں نہیں ہوتا اس 

ٹاپک پر مزید جاننے کے لئے ضروری ہے کہ ہم ایک نظر دبئی 

کے شہزادے پر ضرور ڈالیں دبئی کے شہزادے کا پورا نام 

شیخ حمدان بن محمد بن رشید المخدوم ہے لیکن ان کو 

پوری دنیا ان کے انسٹاگرام نیم فضا کے نام سے جانتی ہے یہ 
خاندان کے پاس اتنا پیسہ ہے کہ اگر 200 لوگ یہ فیصلہ 

کرنے کے لیے بیٹھے ہیں تو ان کو ایک سال لگ جائے گا ذرا 
ایک نظر ان کی ایک ہزار کروڑ روپیوں کی پرائیویٹ 

ھاسپٹل جس کو اس نے آئندہ بھی کہا جاتا ہے پر وہ سکون اور آرام پایا جاسکتا ہے جو شاید کسی بڑے سے بڑے سیون سٹار ہوٹل بیوی نہ ملتا ہو تو صرف نو کے ہیں جو صفائی

 ستھرائی سے لے کر آنے کے ایکسپرٹ ہیں کہ یار شیخ

 خاندان صرف پانچ سے دس لوگوں کی پارٹی کے لئے

 استعمال کرتے ہیں ابھی بات یہاں ختم نہیں ہوئی ان کے 

پاس چار سو ملین ڈالر یعنی 6000 کروڑ روپیوں کی ایک اور یاد بھی ہے جو طبیعت کے نام سے جانی جاتی ہے اس 

کی ہاٹ میں اڑتالیس شاہی مہمان عیش و آرام سے زندگی گزار سکتے ہیں اس کے علاوہ اس میں نوکروں کے کمرے بھی ہیں جو اس دیتے ہوئے تھے ہزار ہزار توڑ کے اس کی خدمت کرتے ہیں اس کے علاوہ تین سو فٹ لمبی اور بیس پریاں اور 180 فٹ لمبی کالی شروع ہوتی ہے ان کے بھائی منصور نے بھی بھائی کو اکیلا ہوں گے نہیں جانے دیا اس نے بھی دس ملین ڈالر یعنی بغیر جوڑ خریدتا ہے جو توڑ کے نام سے جانی جاتی ہے اندر سے نکل کر زمین پر آتے ہی زمین پر بھی شیخ حمدان خرچہ کرنے میں کسی سے پیچھے نہیں ہے بھائی کروڑ روپیوں کی لکڑی مرسڈیز آٹھ بجے سے لے کر چار کروڑ روپے کی مرسڈیز سی این جی ایس ایم ایس کوئی ایسی گاڑی نہیں ہے جو طبی کی سزا دے نہ چھوڑیں کو ایسا ممکن ہی نہیں ہے کہ آپ شیخ حمدان یا اس کے بھائیوں میں سے کسی کو اس سے کمتر گاڑیوں میں سوار ہوتے دیکھے شہزادے کی گاڑیوں کی کلکشن میں اس کے علاوہ فراری لاری اڈہ گیمبر کی ہیروئنوں میکلیرن بیوروکریٹ ایران اور اسپین ماڈل موجود ہے یہ صرف شیخ خاندان کی کرپشن تھی ان کے بھائی منصور بھی مسجد بیگم سے کم بات ہی نہیں کرتے اور یہی حال ہے شیخ خاندان کی پوری فیملی کا اس فیملی کے پاس دنیا کی سب سے مہنگی گاڑیوں کی کل تعداد ایک سو سے بھی زیادہ ہے جس میں گاڑیوں کے جانے والے نام ڈی ایم ڈبلیو کار شامل ہے اب بات کرتے ہیں کہ شیخ حمدان گاڑیوں کی گریٹ کتنے پیسے خرچ کرتے ہیں ان کی اگر یہ نہیں ہوتی ہیں کہ گاڑی میں لیدر سیٹ لگوا لئے یہاں فرنٹ کیمرہ لگا لیا بلکہ ان کی اپڈیٹ کا مقصد ہوتا ہے کہ گاڑی کے اوپر 24 کرکٹ گولڈ کی کوٹنگ کروائی جائے جو آپ ابھی اپنی نسبت دیکھ رہے ہیں ایک چھوٹے سے کی قیمت 25 سے 30 لاکھ کی ہوتی ہے پوری گاڑی کی گولڈن کی قیمت کا اندازہ آپ خود ہلالی نیچے کمنٹس میں گولڈ پلیٹڈ کارکن کی قیمت کا اندازہ ضرور لگایا ہے کہ آپ کو پتہ ہے کہ اس سے بھی بڑھ کر کیا ہے 40 کروڑ روٹیوں کی اونٹنی جی ہاں جی خاندان کو ایک جگہ انتہائی خوبصورت نظر آیا شیخ نے وہی اپنا کار جوان ہو کر وہ اونٹنی اس کی قیمت سے بھی زیادہ پیسے دے کر اپنے نام کرلی اور یہ امید نہیں تھی 40 کروڑ روٹیوں کی ایک طرف تو شیخ خاندان کی شاہ خرچیاں لیکن دوسری طرف سے خاندان ایک انتہائی دریا دلی انسان کی ثابت ہوئے ایک شخص نے اپنے کینسر کے علاج کے لئے اس ادا سے اپیل کی کہ وہ شہزادے نے دس کروڑ روپے کا بل اپنی جیب سے ادا کرنا اس کے علاوہ شہزادی نے دبئی کے تمام ہوسپٹل کو فری علاج کے لیے ایک روپیہ بھی ان کے خاندان اور دبئی کے شاہی خاندان کی شاخ تھی اور دریا دلی کے حوالے سے 
اپنی رائے نیچے کمنٹس میں
 I hope u like this post

Reactions

Post a Comment

8 Comments